مدت زمان پاسخگویی به هر سوال بین 24 تا 72 ساعت است.

لطفا قبل از 72 ساعت از پیگیری سوال و یا ارسال سوال مجدد خودداری فرمائید.

از طریق بخش پیگیری سوال، سوال خود را پیگیری نمایید.

captcha
انصراف

زمان پاسخگویی به سوالات بین 24 تا 72 ساعت می باشد.

انصراف
چینش بر اساس:حروف الفباجدیدهاپربازدیدها

مصالحت میں مدمقابل کا اپنے وعدوں پر عمل نہ کرنا

میری ماں اب اس وقت بڑھاپے کی زندگی بسر کررہی ہے اور افسوس کہ صاحب فراش ہوگئی ہیں، ان کی کچھ جائداد وغیرہ ہے جسے انھوں نے کربلائے معلّیٰ کی زیارت کے لئے لے، اپنی زندگی کے اخراجات اور مرنے کے بعد کفن ودفن وغیرہ کے اخراجات کے عوض اپنے بھانجے کو دیدی ہے جبکہ اپنے بچوں کو میراث سے محروم کردیا ہے نیز شرط کی ہے کہ جب تک زندہ ہیں اس جائداد کے منافع سے استفادہ کرتی رہیں، لیکن ان کے بھانجے نے بعض شرائط پر عمل نہیں کیا اور وہ ان کی زندگی کے تمام اخراجات نیز کفن ودفن کے خرچہ کی ذمہ داری قبول نہیں کرتا ہے ، برائے مہربانی اس سلسلہ میں شریعت کا حکم بیان فرمائیں؟

اگر کوئی شخص کہ جس کو مصالحت کے طور پر مال دیا گیا ہے، مقررہ شرائط پر عمل نہیں کرتا، تو وہ خاتون مصالحت کے معاملہ کو فسخ کرسکتی ہے اور اگر وہ خاتون دنیا سے گذرجائے اور وہ شخص طے شدہ شرائط کے مطابق اخراجات ادا نہ کرے تب وارثوں کو مصالحت کے معاملہ کو فسخ کرنے کا حق ہے، وہ لوگ فسخ کرسکتے ہیں ۔

دسته‌ها: صلح کے احکام

مہر کی رقم دینے کیلئے رہائشی مکان بیچنا

ایک شخص اپنی بیوی کے چالیس لاکھ تومان مہر کا مقروض ہے ، شہر میںبہترین جگہ اور محلہ میں ، اس کا رہائیشی مکا ن ہے جس کا اب اس وقت تیس لاکھ تومان کا خریدار موجود ہے،کیا یہ رہائیشی مکان فرض کے مستشنیات کا حصہ ہے ؟

جب بھی ، مذکورہ قرض کا مطالبہ ہو ، اور مکان اس کی شان و منزلت سے بڑھ کر ہو تو اس صورت میں ، اس مکان کو ایسے مکان سے بدل لے کہ جو اس کی شان کے مطابق ہو اور مزید اضافی قیمت کو قرض کی ادائیگی میں خرچ کرے۔

پایگاه اطلاع رسانی دفتر مرجع عالیقدر حضرت آیت الله العظمی مکارم شیرازی
سامانه پاسخگویی برخط(آنلاین) به سوالات شرعی و اعتقادی مقلدان حضرت آیت الله العظمی مکارم شیرازی
آیین رحمت - معارف اسلامی و پاسخ به شبهات کلامی
انتشارات امام علی علیه السلام
موسسه دارالإعلام لمدرسة اهل البیت (علیهم السلام)
خبرگزاری دفتر آیت الله العظمی مکارم شیرازی