سوره قمر/ آیه 9- 17

سایٹ دفتر حضرت آیة اللہ العظمی ناصر مکارم شیرازی

صفحه کاربران ویژه - خروج
ورود کاربران ورود کاربران

LoginToSite

کلمه امنیتی:

یوزرنام:

پاسورڈ:

LoginComment LoginComment2 LoginComment3 .
ذخیره کریں
 
تفسیر نمونہ جلد 23

٩۔کَذَّبَتْ قَبْلَہُمْ قَوْمُ نُوحٍ فَکَذَّبُوا عَبْدَنا وَ قالُوا مَجْنُون وَ ازْدُجِرَ ۔
١٠۔فَدَعا رَبَّہُ أَنِّی مَغْلُوب فَانْتَصِرْ۔
١١۔فَفَتَحْنا أَبْوابَ السَّماء ِ بِماء ٍ مُنْہَمِرٍ۔
١٢۔ وَ فَجَّرْنَا الْأَرْضَ عُیُوناً فَالْتَقَی الْماء ُ عَلی أَمْرٍ قَدْ قُدِرَ۔
١٣۔وَ حَمَلْناہُ عَلی ذاتِ أَلْواحٍ وَ دُسُر۔
١٤۔ تَجْری بِأَعْیُنِنا جَزاء ً لِمَنْ کانَ کُفِرَ۔
١٥۔وَ لَقَدْ تَرَکْناہا آیَةً فَہَلْ مِنْ مُدَّکِرٍ۔
١٦۔ فَکَیْفَ کانَ عَذابی وَ نُذُرِ۔
١٧۔ وَ لَقَدْ یَسَّرْنَا الْقُرْآنَ لِلذِّکْرِ فَہَلْ مِنْ مُدَّکِرٍ۔

ترجمہ

٩۔اس سے پہلے قوم نوح نے تکذیب کی ( جی ہاں) ہمارے بندے (نوح ) علیہ السلام کی اورکہا وہ دیوانہ ہے ۔اور انہیں جھڑ کیا ں دیں ۔
١٠۔ اُس نے بارگاہِ پروردگار میں عرض کیامیں اس سرکش قوم سے سے مغلوب ہوں ان سے میرا اِنتقام لے ۔
١١۔ اس وقت ہم نے آسمانوں کے درواز ے کھول دیے اور بہت زیادہ اور مسلسل پانی پرسنے لگا ۔
١٢۔ اور زمین کوہم نے شگافتہ کیااور بہت سے چشمے نکالے اوریہ دونوں قسم کے پانی جس مقدار میں بھی تھے آپس میں مِل گئے ۔
١٣۔ اورہم نے نوح علیہ السلام کوایک سواری (کشتی) پرکہ جوتختوں اورمیخوں سے بنائی گئی تھی سوار کیا ۔
١٤۔ ایسی سواری کہ جو ہماری نگرانی میں چلتی تھی یہ عذاب تھااس گروہ کے لیے کہ جو اس کامُنکر تھا ۔
١٥۔ہم نے یہ واقعہ نشانی کے عنوان سے اُمّتوں کے درمیان باقی رکھا توکیاکوئی ہے جو نصیحت حاصل کرے ۔
١٦۔ اَب دیکھو کہ میراعذاب اورتخویف دونوں کیسے تھے ۔
١٧۔ ہم نے قرآن کوذکر کے لیے آسان قرار دیاتوکیا کوئی ہے کہ جونصیحت حاصل کرے ۔
12
13
14
15
16
17
18
19
20
Lotus
Mitra
Nazanin
Titr
Tahoma